تین مرتبہ طلاق دی لیکن طلاق نہیں ہوئی کیسے ؟

حضرت عیسیٰ بن موسیٰ ہاشمی اپنی بیوی سےبہت زیادہ پیارکرتے تھے۔ایک د ن چودھویں رات کاچاندچڑھاہواتھاکہنے لگے اگرچاندتجھ سے زیادہ حسین ہے توتجھ کوتین طلاقیں ہوں۔بیوی نے فوراپردہ کرلیااورکہاکہ چاندتوپوری اآب وتاب کیساتھ چمک رہاہےاورمیری رنگت میں تووہ چمک نہیں ہے لہذٰاتونے مجھے تین طلاقیں دیں اورطلاقیں واقع ہوگئیں۔ ۔جاری ہے ۔

 

......
loading...

بڑے پریشان ہوگئے ۔رات بہت مشکل سے گزاری صبح خلیفہ منصورکے پاس اآگئے۔اورکہاکہ میں رات اپنی بیوی کویہ کہہ بیٹھاہوں تواس کے بارے میںکیاحکم ہے؟توخلیفہ منصورنے علما کوبلایااورسب کے سامنے یہ مسئلہ رکھاتوسب نے کہاکہ طلاق ہوگئی ۔ایک آدمی خاموش بیٹھاتھااوروہ امام ابوحنیفہ کاشاگردتھا۔سب نے کہاکہ طلاق ہوگئی منصورپوچھنے لگاکہ تم نہیں بول رہے ہو۔تواس عالم نے سورۃ طین کی اآیات تلاوت کیں۔اورکہاکہ میرے رب نےکہاہے کہ میں نے انسان کوسب سےزیادہ خوبصورت بنایاہے۔..۔جاری ہے ۔

فرمایہ کہ چاندجتنابھی زیادہ خوبصورت کیوں نہ ہواوریہ کتنی ہی کالی کیوں نہ ہوانسان ہونے کے ناطے یہ چاند سے زیادہ حسین ہے۔توخلیفہ منصورنے کہاکہ جائواپنی بیوی سے کہوکہ کوئی طلاق نہیں ہوئی تم پریشانی چھوڑ دو۔