عزیر بلوچ کے قریبی ساتھی کو میری بیگم پسند آگئی وہ گھر آیا اورطلاق دینے کا مطالبہ کیا میں نے انکار کیا تو نہ صرف میری بیگم پر قبضہ کر لیا بلکہ اس پاکستانی شوہر کی کہانی جان کر آپ کا بھی دل خون کے آنسو روئے گا

لیاری گینگ کے کارندے نے گگو منڈی کے رہائشی کی بیوی اور کراچی میں موجود مکان پر قبضہ کر لیا۔ محمد یٰسین اپنی بیوی کے ہمراہ آسو گوٹھ ملیر کراچی میں اپنے ذاتی مکان میں رہائش پذیر تھا ۔ لیاری گینگ کے سربراہ عزیر بلوچ کے قریبی ساتھی لیاقت بلوچ کو اس کی بیوی پسند آگئی۔ یٰسین سے زبردستی اس کی بیوی خدیجہ کو طلاق دلوا کر خود اس سے نکاح کر لیا۔جاری ہے ۔

اور یٰسین کو گھر سے نکال دیا۔ محمد یٰسین کئی سالوں سے تھانہ ملیر اور پولیس کے اعلیٰ افسران کے دفتر وں کے چکر لگا رہا ہے لیکن کہیں شنوائی نہ ہوئی۔ متاثرہ شخص ”خبریں “ آفس پہنچ گیا۔ محمد یٰسین کی ڈی جی رینجر ، وزیراعلیٰ سندھ، آئی جی سندھ سے انصاف دلائے جانے کی اپیل۔تفصیلات کے مطابق گگو منڈی کی نواحی بستی محمد پورہ کے رہائشی محمد یٰسین نے ”خبریں “ کو بتایا کہ میں اپنی بیوی خدیجہ بی بی کے ہمراہ آسو گوٹھ ملیر کراچی میں رہائش پزیر تھا۔ اسی دوران لیاری گینگ کے رکن لیاقت بلوچ جو اسی محلہ میں رہتا تھا کو میر ی بیوی پسند آگئی۔ لیاقت بلوچ اپنے ساتھیوں سہیل وغیرہ کے ہمراہ میرے گھر آیا اور کہا کہ وہ عزیر بلوچ کا قریبی ساتھی ہے تم اپنی بیوی کو طلاق دے دو نہیں تو تمہیں جان سے مار دیں گے۔۔جاری ہے ۔

لیاقت بلوچ نے ڈرا دھمکا کر مجھ سے میری بیوی خدیجہ کو طلاق دلوادی اور خود اس سے نکاح کر لیا۔ نکاح کرتے ہی لیاقت بلوچ نے میرے ذاتی 126 مربع گز کے مکان اور گھریلو سامان قبضہ کر کے مجھے کہا کہ فوری کراچی سے نکل جاﺅ نہیں تو اس کا انجام اچھا نہ ہو گا۔ محمد یٰسین نے بتایا کہ میں داد رسی کیلئے تھانہ ملیر اور پولیس کے اعلیٰ افسران کے دفتروں میں کئی سالوں سے دھکے کھا رہا ہوں میری کہیں بھی شنوائی نہیں ہوئی ۔ محمد یٰسین نے ڈی جی رینجر، وزیراعلیٰ سندھ اور آئی جی سندھ سے انصاف دلائے جانے کی اپیل کی ہے۔

کیٹاگری میں : news