بازار گئی 19۔ سالہ نوجوان لڑکی واپس نہ آئی تو باپ تلاش کیلئے نکل پڑا گھر کے قریب ہی زمین ذرا ہلتی نظر آئی تو کھودنے بیٹھ گیا مٹی ہٹائی تو نیچے سے اسی چیزنکل آئی کہ واقعی پیروں تلے زمین نکل گئی اس کی بیٹی کو

بھارتی ریاست بہار میں درندہ صفت بدمعاشوں نے سفاکیت کی انتہاءکر دی۔ مسلمان شہری کی زمین ہتھیانے کے لئے اس کی نوجوان بیٹی کو زندہ زمین میں دفن کر دیا۔ وہ تو قدرت کو لڑکی کی زندگی منظور تھی کہ اس کا والد بروقت اس جگہ پہنچ گیا جہاں اس کی بیٹی کو دفن کیا گیا تھا۔۔جاری ہے ۔


دی مرر کی رپورٹ کے مطابق 19 سالہ خوشبو خاتون کا تعلق گووند پور گاﺅں سے ہے۔ اتوار کے روز وہ مقامی مارکیٹ سے اپنے گھر کی جانب جا رہی تھی کہ تین افراد نے اسے اغواءکیا اور اس کے گھر کے قریب ہی ایک گڑھے میں پھینک کر اس کے اوپرمٹی ڈال دی۔جب خوشبو گھر نہ پہنچی تو اس کے 43 سالہ والد محمد عظیم انصاری اور 40 سالہ ماں سجنا خاتون کو شدید پریشانی لاحق ہوئی۔ وہ اسے ادھر اُدھر تلاش کر رہے تھے ۔جاری ہے ۔

کہ عظیم انصاری کی نظر ایک گڑھے میں ڈالی ہوئی تازہ مٹی پر پڑی اور اس کے دل نے کہا کہ یہاں ضرور کوئی گڑ بڑ ہے۔ اس نے گڑھے کی مٹی کو کھودنا شروع کر دیا اور گاﺅں کے لوگوں کو بھی اپنی مدد کرنے کو کہا۔اس کے بعد جو رونگٹے کھڑے کر دینے والے مناظر نظر آئے ان کی لرزہ خیز ویڈیو بھی انٹرنیٹ پر سامنے آچکی ہے۔ اس ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ گاﺅں کے لوگ دیوانہ وار اپنے ہاتھوں سے مٹی ہٹا رہے ہیں۔ جوں جوں مٹی ہٹتی جاتی ہے اس کے نیچے دبی لڑکی کا جسم نظر آنا شروع ہو جاتا ہے۔ کچھ ہی دیر میں اتنی مٹی ہٹا لی جاتی ہے کہ اس کا چہرہ زمین سے باہر آجاتا ہے۔ ۔جاری ہے ۔

......
loading...


بدقسمت لڑکی کے لیے سانس لینا تقریباً نا ممکن ہو چکا تھا۔ اسے زمین سے نکالنے کے بعد فوری طور پر قریبی سرکاری ہسپتال لیجایا گیا جہاں اس کا علاج جاری ہے۔مقامی میڈیا کے مطابق مسلمان لڑکی کو اغوا کر کے زندہ زمین میں دفن کرنے والے مرکزی ملزم کا نام امیت بتایا گیا ہے، جس نے زمین کے جھگڑے پر عظیم انصاری کوسبق سکھانے کیلئے ۔جاری ہے ۔

اس کی بیٹی کو زندہ زمین میں دفن کر دیا تھا ۔ مقامی پولیس کے مطابق امیت، عظیم انصاری کی زمین پر قبضہ کر کے وہاں بلڈنگ بنانا چاہ رہا تھامگر عظیم اپنی زمین اس کے حوالے کر نے پر تیار نہیں تھا۔ عظیم انصاری کی شکایت پر پولیس نے امیت اور اس کے دو ساتھیوں کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے ،لیکن تاحال کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول کریں۔ ↓↓↓۔