پاکستانی سوشل میدیا پر تہلکہ مچانے والے یہ انکل مجبور اور رابعہ دراصل کون ہیں آپ بھی جانئے

اگر آپ ذراسا بھی سوشل میڈیا استعمال کرتے ہیں تو انکل مجبور اور رابعہ کے نام سے ضرور واقف ہو چکے ہوں گے۔ دراصل اس بدقسمت انکل نے کام ہی ایسا گھٹیا کیا ہے کہ دیکھتے ہی دیکھتے پورے ملک میں مشہور ہو گیا ہے۔ بلکہ یوں کہئیے کہ پورے ملک میں بدنام ہو گیا ہے، اور بدنام بھی ایسا کہ ساری عمر کسی کو منہ نہیں دکھا سکے گا۔۔جاری ہے ۔


ویب سائٹ مینگوباز کے مطابق یہ ویڈیو پہلی بار تقریباً ایک سال قبل سامنے آئی اور انٹرنیٹ پر دیکھتے ہی دیکھتے جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی۔ اگر آپ یہ ویڈیو دیکھ چکے ہیں تو کیا کہا جا سکتا ہے، لیکن اگر نہیں دیکھی تو بہتر ہے کہ اسے دیکھنے سے اجتناب ہی کریں۔ویڈیو میں یہ شخص، جسے انٹرنیٹ صارفین نے انکل مجبور کا نام دے ڈالا ہے، آٹے کی بوریوں کے درمیان کھڑا کسی رابعہ نامی خاتون سے بات کرتا نظر آتا ہے۔۔جاری ہے ۔

......
loading...

اس دوران وہ اپنی محبوبہ کے لئے اپنی جنسی تڑپ انتہائی فحش الفاظ میں بیان کرتا ہے اور ساتھ ہی جنسی وحشت کے ہاتھوں مجبور ہو کر آٹے کی بوریوں کو جنسی ہوس کا نشانہ بناتا بھی نظر آتا ہے۔ جنسی مدہوشی کے عالم میں وہ جس طرح کے الفاظ استعمال کرتا ہے، وہ اب انٹرنیٹ صارفین کے لطائف کا حصہ بن چکے ہیں۔انکل مجبور کا مذاق اُڑانے کیلئے انٹرنیٹ صارفین نے ہزار طرح کے لطائف گھڑلئے ہیں اور طرح طرح کی مزاحیہ تصاویر بنائی ہیں۔ اس شخص کی جنسی دیوانگی کے بارے میں تبصروں کا بھی نا تھمنے والا سلسلہ جاری ہے۔ مثال کے طور پر زین نامی سوشل میڈیا صارف نے انکل مجبور کے دل کی تصویر کشی کرتے ہوئے بتایا۔جاری ہے ۔

کہ یہ آرام کی حالت میں، ورزش کرتے ہوئے اور رابعہ سے باتیں کرتے ہوئے کیسا نظر آتا ہے۔ اسی طرح کچھ انٹرنیٹ صارفین نے انکل مجبور کی ویڈیو کی انتہائی دلچسپ اور مضحکہ خیز ڈبنگ پر مبنی مزاحیہ ویڈیوز بھی بنائی ہیں۔ حتٰی کہ انکل مجبور کے مشہور ڈائیلاگ ”اوہ رابعہ! چھوڑ دو مجھے“ ، ”میں بہت مجبور ہوں“ اور ”اوہ، میری جان نکل جاندی اے“ والی ٹی شرٹس بھی بازار میں بک رہی ہیں۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول  کریں۔ ↓↓↓۔