امریکہ میں اسلام مخالف شخص مسجد کو نشانہ بنانے کے بعد عذاب الٰہی کا شکار۔۔ اس کیساتھ ایسا کیا ہوا کہ جس نے دیکھا وہ توبہ استغفار کرنے لگ گیا

امریکہ اور یورپ سمیت دنیا کے کئی ممالک میں اس وقت مسلمان اور ان کی عبادت گاہوں کو نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ چند افراد ایسے ہیں جو سر عام مساجد کو امریکہ اور یورپ میں نشانہ بناتے ہیںمگر ایسی خبر سننے کو نہیں ملی کہ ان افراد کے سد باب کیلئے ۔جاری ہے

کوئی ٹھوس قدم اٹھایا گیا ہو۔ایسا ہی ایک واقعہ امریکہ میں پیش آیا جہاں اسلام سے نفرت کے اظہار کیلئے ایک شخص نے ایک مسجد کو نشانہ بنایا،مسجد کو نشانہ بنانے کے بعد یہ شخص قدرت کے انتقام کا نشانہ بنا۔ اس واقعہ کی ویڈیو وہاںنصب سی سی ٹی وی کیمروں کے ذریعے محفوظ ہو گئی ہے جو کہ اب سوشل میڈیا پر وائرل ہو چکی ہے ۔جاری ہے

۔ویڈیو ملاحظہ کریں

جسے اب تک ہزاروں افراد دیکھ چکے ہیں، اسلام مخالف یہ شخص اچانک گلی کے ایک کنارے سے نمودار ہوتا ہے اور مسجد کے سامنے پہنچ کر مسجد کے شیشوں کو توڑنے لگ جاتا ہے کہ اسی اثنا میں وہاں سے گزرنے والا ایک راہگیر جب اسے روکنا کی کوشش کرتا ہے تو یہ شخص بپھر جاتا ہے اور اس نے اس کو بھی گریبان سے پکڑ کر ہراساں کرتا ہے ۔ مسجد کے شیشے توڑنے سے منع کرنے والا شخص خوفزدہ ہو کر پیچھے ہٹ جاتا ہے اور وہ شخص نہایت اطمینان سے مسجد کے بقایا شیشوں کو بھی توڑنے لگ جاتا ہے۔ مسجد کے شیشے توڑنے کے بعد یہ شخص جیسے ہی جائے وقوعہ سے فرار ہونے کیلئے دوڑ کر سڑک کراس کرنے لگتا ہے ۔جاری ہے

تو عذاب الٰہی کا شکار ہو کرایک تیز رفتار گاڑی کی زد میں آجاتا ہے۔ اس کے ساتھ کیا ہوتا ہے۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول کریں ۔↓↓↓۔

کیٹاگری میں : news