ایک خو بصورت بیوی ہونے کے با و جو د بھی شوہر دوسری عورتو ں کی طر ف مائل کیو ں ہو تے ہیں ؟ حیران کن رپورٹ جاری

وہ دوسری عورتوں میں انٹرسٹڈ ہے۔ جب کہ سب کہتے ہیں میں بہت خوبصورت ہوں مگر یہ خوبصورتی اسے کیوں نہیں دِکھتی؟ اس کے لہجے سے ٹپکتی حسرت مجھے بھی اداس کر گئی۔گوری چٹی رنگت، سبز آنکھیں، گھنے کالوں بالوں میں اسٹپ کٹنگ، وہ بلاشبہ بہت خوبصورت تھی ۔ خاندانی حسب نسب پڑھی لکھی ، سلیقہ شعار، وفا شعار بھی۔۔ پھرایسا کیا تھا جو اس کا شوہر دوسری عورتوں کی طرف مائل رہتا تھا۔ جاری ہے

مجھے چند سال پہلے ہونے والی گفتگو یاد آئی جب میں نے پہلی بار اسے سکن ٹائٹ جینز اور لانگ شرٹ میں دیکھا اور وہ تصویر اس نے فیس بک پہ شیئر کی ہوئی تھی ۔ فرینڈز اینڈ فیملی کی کثیر تعداد نے اسے سراہا تھا، وہ سراہے جانے کے لائق تھی۔ میں نے فون کال پہ اس سے بات کی۔ یہ ٹھیک نہیں ہے تم پردہ نہیں کرتیں مگر ایسے اپنی تصویر فیس بک پہ مت لگاؤ تمہارے کپڑے ٹھیک نہیں۔مگر میرے شوہر کو میں ایسے اچھی لگتی ہوں۔ اس نے جواب دیا۔تو گھر میں اسے پہن کے دِکھا دیا کرو پبلک میں ظاہر کرنے کی کیا ضرورت ہے۔ میں نے تھوڑی خفگی سے کہا۔جاری ہے


ہاں تم نے ٹھیک کہا ۔ وہ ہمیشہ میری بات کو مثبت انداز میں لیا کرتی تھی۔ تصویر ہٹا لی گئی۔ کچھ دن بعد ایک اور تصویر لانگ اسکرٹ کے ساتھ فیس بک پہ پھر براجمان تھی۔ داد و تحسین سے بھرپور کمنٹس جن میں محرم نا محرم سبھی شامل تھے۔
یا اللہ اس لڑکی کا کیا کروں ؟ اسے پھر سے سمجھایا ۔ اس کے پاس پھر وہی جواب تھا ۔ میں اپنے شوہر کو ایسے پسند ہوں۔ جب اس نے پہلی بار آئی بروز بنوائی ۔ میرے منع کرنے پہ اس نے وہی شوہر کو پسند ہے والی دلیل پیش کر دی، مگر اللہ کو پسند نہیں، اللہ نے لعنت بھیجی ہے ایسی عورتوں پہ، اس کے جواب میں “یار کیا کروں میری آئی بروز بہت پھیلی ہوئی ہیں ۔ بہت بدنما لگتی ہیں شوہر کو نہیں پسند۔اس گزرتے وقت میں جاری ہے

......
loading...

جہاں دوپٹہ سے اسکارف اور اسکارف کے مختصر ہوتے ہوتے غائب ہو جانا، جینز کا مزید چست اور شرٹس کا ٹاپ میں بدلنا، ٹاپ کا بھی رفتہ رفتہ اوپر کھسکتے جانا، اور آج سے کوئی ایک ماہ پہلے میں نے اس کی واٹس ایپ پہ تصویر دیکھی جس پہ بے اختیار انا للہ پڑھا۔ آج اس نے روتے ہوئے مجھ سے شوہر کی بے اعتنائی کا شکوہ کیا۔اگر اتنی تگ و دو اللہ کے لیے کی ہوتی تو وہ کبھی منہ نہ موڑتا، پاگل لڑکی شوہر کے دل میں محبت تم نے نہیں ڈالنی، نہ تمہارا کوئی عمل اس محبت کو پیدا کر سکتا ہے۔ جب تک اللہ نہ چاہے، تم شوہر کی محبت میں ہر ناجائز کام کرتے کرتے بھول گئیں کہ جس اللہ نے لعنت بھیجی ہے ۔ نوچنے اور نوچوانے والی پر وہ لعنت ذدہ شکل کیسے شوہر کو خوبصورت لگ سکتی ہے؟ جاری ہے

اللہ کی مان کر چلتی تو اللہ آسمان میں فرشتوں کو تم سے محبت کا حکم دیتا اور زمین میں انسانوں کو۔ کیا مجال تھی تمہارے شوہر کی وہ تمہاری طرف مائل نہ ہوتا۔ شوہر کی فرمانبرداری کرو مگر جہاں اس کی بات اللہ کے حکم سے ٹکرائے وہاں اللہ کی رسی تھام لو ۔یقین رکھو وہ تمہں گرنے نہیں دے گا۔ تم جتنی وفا شعار مجازی خدا سے رہیں، کیا ہی اچھا ہوتا اگر حقیقی خدا (اللہ) سے رہتیں۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول کریں ۔↓↓↓۔