لاہور گلبرگ میں نوعمر لڑکی کی شادی کی کوشش مگر کس طریقے سے ایسا انکشاف کہ کوئی سوچ بھی نہ سکتا تھا کہ لاہور شہر میں بھی ایسا ممکن ہے

تھانہ غالب مارکیٹ کے علاقے میں 14سالہ لڑکی کی مبینہ جبری شادی کی کوشیش کی گئی، شادی کی اطلاع ملنے پر متعلقہ پولیس موقع پر پہنچ گئی۔ معاملے کی تحقیقات شروع کردی گئیں۔

 

 

تفصیلات کے مطابق پولیس کو 15 پر کال موصول ہوئی کہ حسین آباد کے علاقے میں 14 سالہ لڑکی ثانیہ کی راولپنڈی کے 32 سالہ لڑکے سے مبینہ جبری شادی کرائی جارہی ہے جس پر پولیس کی بھاری نفری جائے وقوعہ پر پہنچ گئی۔پولیس کے بارہا مطالبے پر 3 گھنٹے بعد اہل خانہ نے مدرسہ چھوڑنے کا سرٹیفیکیٹ دیا جس کے مطابق اس کی عمر 16 سال 5 ماہ ہے۔ ثانیہ نے کہا کہ شادی اس کی رضامندی سے ہورہی ہے .

 
دوسری جانب لڑکی کے باپ نے کہا کہ 15 پر کسی نے جھوٹی اطلاع دی ہے۔پولیس نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے لڑکی کے مدرسے کے سرٹیفیکیٹ کو تسلی بخش جانا۔ایس ایچ او غالب مارکیٹ عاطف کا کہنا تھا کہ تمام حالات کی رپورٹ افسران کو دے دی ہے۔

......
loading...

 

 

پولیس کے مطابق واقع کی اطلاع سلیم کے داماد یاسر نے دےکر گھر میں پولیس بلائی ہے جبکہ اصل حقائق تحقیقات کے بعد سامنے آئیں گی۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول  کریں۔ ↓↓↓۔