موٹی یا پتلی کونسی عورت میں بانجھ پن کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے جان لیں

آج کل دبلی پتلی خواتین نے فلم کی سکرین سے لے کر مردوں کی سوچ تک ہر چیز کو اپنی گرفت میں لے رکھا ہے۔خواتین کی خوبصورتی کے لئے ان کے دبلے پن کو معیار بنا لیا گیا ہے اور قدرے موٹی خواتین کو ہر کوئی نظر انداز کر رہا ہے،

لیکن کیا یہ طرز فکر درست ہے؟ اس موضوع پر تحقیق کرنے والے ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ سوچ درست نہیں کیونکہ قدرے زیادہ وزن والی خواتین کی شخصیت کے بہت سے ایسے مثبت پہلو ہیں جو عام پائی جانے والے منفی معیارات کی وجہ سے نظر انداز ہو گئے ہیں۔نیشنل اٹانومس یونیورسٹی آف میکسیکو کے شعبہ سائیکالوجی کی ایک تحقیق میں قدرے موٹی خواتین کے بارے میں ایک ایسی ہی حیران کن بات سامنے آئی ہے۔ تحقیق کے مطابق ان خواتین کے شوہر دبلی خواتین کے شوہروں کی نسبت 10 گنا زیادہ خوش رہتے ہیں۔

ماہرین نفسیات کا کہنا ہے کہ یہ خواتین عموماً زیادہ خوش مزاج ہوتی ہیں اور ان کے ساتھ وقت گزارنا زیادہ پرلطف ثابت ہوتا ہے۔ یہ کھانے پینے کی بھی شوقین ہوتی ہیں اور اپنے شوہروں کو بھی مزے مزے کے کھانے کھلاتی رہتی ہیں۔یہ صرف کھانے کی ہی شوقین نہیں ہوتیں بلکہ عموماً اچھا کھانا پکانا بھی جانتی ہیں۔عموماً انہیں خوش رکھنا بھی زیادہ آسان ہوتا ہے۔ آپ ان کیلئے کوئی چاکلیٹ یا مٹھائی وغیرہ خرید لیں تو یہ خوشی سے پھولی نہیں سماتی ہیں۔انہیں کھانے پینے میں نخرے دکھانے کی عادت نہیں ہوتی۔ شوہر عموماً انہیں جو بھی کھلانا چاہیں یہ خوشی سے کھالیتی ہی۔

ان خواتین کے شوہروں کے لئے ایک اور اطمینان کا پہلو یہ ہوتا ہے چونکہ یہ خود قدرے موٹی ہوتی ہیں لہٰذا یہ شوہر پر بھی دباﺅ نہیں ڈالتی ہیں کہ وہ اپنا وزن کم کرے۔دونوں اپنے اپنے حال میں مست رہ سکتے ہیں۔ ان خواتین کے شوہروں کے زیادہ خوش ہونے کی ایک وجہ یہ بھی ہے کہ انہیں یہ فکر لاحق نہیں ہوتی کہ ان کی بیوی کسی فیشن ماڈل جیسی نظر آتی ہے اور ہر وقت غیر مردوں کی نظر اس پر رہتی ہے۔

یہ سب خوبیاں مردوں کے لئے بہت خوش گوار ثابت ہوتی ہیں، لیکن ان کا انکشاف تو تب ہی ہو سکتا ہے جب کوئی مرد کسی نسبتاً موٹی خاتون کے ساتھ زندگی بسر کرنے کا فیصلہ کرے۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول  کریں۔ ↓↓↓۔