موجودہ سیاستدانوں کو پڑنے والے جوتے توآپ نے دیکھ ہی لیے لیکن جب ایک مرتبہ بھٹو کو سیاسی ورکر نے جوتا دکھایا تو انہوں نے آگے سے کیا کہا تھا؟ جان کرآپ کی حیرت کی انتہاء نہ رہے گی

پاکستان کی سیاست میں نامناسب زبان کے استعمال کے بعد نئی چیز جوتا بازی بھی داخل ہوگئی ہے ، نوازشریف کو جوتا مارا گیا جس کے بعد ایک نجی ٹی وی چینل کے مطابق فیصل آباد میں عمران خان کو دو تھپڑ مارے گئے

۔۔جاری ہے۔

جبکہ گجرات میں جوتا بھی اچھالاگیا جو ساتھ کھڑے پی ٹی آئی رہنما علیم خان کو جالگا لیکن ایک دفعہ کا ذکر ہے کہ سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو کو بھی جوتے دکھائے گئے ۔روزنامہ خبریں کے مطابق تجزیہ کار سمیع ابراہیم نے بتایا کہ ذوالفقار علی بھٹو ضیا دور میں اقتدار سے علیحدگی کے بعد ناصر باغ لاہور میں آئے، میں نے انہیں ٹرک میں سوار دیکھا ،

۔۔جاری ہے۔

......
loading...

ان دنوں قومی اتحاد کے لوگ ان کے سخت خلاف تھے کسی نے ان کے قریب جا کر دونوں ہاتھوں میں پکڑے ہوئے جوتے دکھائے، مشتعل ہونے کے بجائے بھٹو نے یہ نہیں کہا کہ اس شخص کو مارو بلکہ ازراہ مزاح یہ کہا

۔۔جاری ہے۔

کہ مجھے معلوم ہے جوتے بہت مہنگے ہو گئے ہیں، دوسری بار حکومت ملی تو سب سے پہلے جوتے سستے کروں گا۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول  کریں۔ ↓↓↓۔