جومرد اپنی بیگم سے اس ایک بات پر بحث نہیں کرتے اُن کی شادی شدہ زندگی سے زیادہ خوشگوار ہوتی ہے

خوشگوار ازدواجی زندگی کے حصول کے لیے اب تک سائنسدان کئی تحقیقات میں مختلف تدابیر بتا چکے ہیں۔ اب ایک ماہر نے انتہائی آسان طریقہ بتا دیا ہے جس سے ازدواجی زندگی کو پرسکون بنایا جا سکتا ہے۔ بزنس انسائیڈر کی رپورٹ کے مطابق ڈاکٹر جان گوٹ مین نامی سائنسدان نے شوہروں کو ہدایت کی ہے کہ اگر آپ اپنی ازدواجی زندگی کو خوشگوار بنانا چاہتے ہیں تو اپنی بیوی کی تمہیں زیراثر لانے کی کوششوں کو ناکام مت بنائیں، بلکہ وہ تم پر غالب آنے کے لیے جو کچھ کرتی ہے، اسے کرنے دیں۔“(جاری ہے) ہ


ڈاکٹر جان کا مزید کہنا تھا کہ ”جب کبھی کسی بات پر بحث شروع ہو تو کسی بھی طرح بحث کو ختم کرنے کی کوشش کریں اور طول مت دیں۔ اگر آپ اور کچھ نہیں کر سکتے تو کوئی بھی بہانہ کرکے باہر نکل جائیں۔کیونکہ بحث کو طول دے کر آپ کبھی تعلقات کو خوشگوار نہیں بنا سکتے۔ میاں بیوی کی بحث دوطرفہ الزامات سے لبریز ہوتی ہے (جاری ہے) ہ

جو مزید تلخیوں کا باعث بنتی ہے۔جو شوہر اپنی بیوی کو خود پر رسوخ بڑھانے کی اجازت دیتے ہیںا ور اس سے بحث سے گریز کرتے ہیں ان کی ازدواجی زندگی دوسروں کی نسبت کئی گنا خوشگوار ہوتی ہے اور ان میں طلاق کا امکان کم ہوتا ہے۔“

اپنا تبصرہ بھیجیں