گناہ کو مٹانے کا آسان حل!

ادھر فیس بک پر ہی ایک کلپ دیکھ رہا تھا۔اس کلپ میں دکھایا گیا تھا کہ کس طرح ہمارے ایک پاکستانی چینل کے جرآت مند بے باک اور معاشرے کی برائیوں کے خلاف جہاد کرنے والے صحافی برائی کے خلاف جہاد کرنے نکلے ہوئے تھے جرم اور گناہ کا پردہ فاش کرنے کے لئے وہ رات کے اندھیرے میں سڑک پر کھڑی دو خواتین کے پاس پہنچتے ہیں۔ ان میں سے ایک ادھیڑ عمر کی دیہاتی لہجے میں بات کرنے والی عورت ہوتی ہے جبکہ دوسری ایک نقاب پوش نوجوان لڑکی ہوتی ہے۔ کچھ دور کھڑا ایک دوسرا بے باک نڈر کیمرے والا صحافی اندھیرے میں چھپا اپنے بہادر صحافی ساتھی اور دونوں خواتین کے دھندلے سے مناظر اور آواز ریکارڈ کر رہا ہوتا ہے۔۔جاری ہے ۔


بہادر صحافی ان خواتین سے بھاؤ تاؤ کرنے لگتا ہے۔وہ خواتین کیمرے کی موجودگی سے بے خبر اس کے ساتھ پروگرام بنانے لگتی ہیں۔ وہ ان کا انٹرویو شروع کر دیتا ہے کہاں سے آئی ہو کہاں رہتی ہو وغیرہ وغیرہ۔۔۔ اسی اثناء میں وہ سیٹی بجا کر کیمرے والے بہادر صحافی کو بلاتا ہے۔اچانک منظر بدلتا ہے کیمرے والا لائٹ آن کرکے ان خواتین کا چہرہ نمایاں کرتا ہے۔ ادھیڑ عمر عورت کے چہرے پر لکھی غربت واضح ہوجاتی ہے۔ خواتین خوفزدہ ہو کر ان سے بچ نکلنے کی کوشش کرنے لگتی ہیں تو اس بہادر صحافی کے تین چار اور بہادر ساتھی اندھیرے سے نکل کر ان خواتین کے گرد گھیرا ڈال کر ان کے فرار کا راستہ روک لیتے ہیں۔۔جاری ہے ۔


کیمرے والا بہادر اور نڈر صحافی اپنا کیمرہ ان کے چہرے کے قریب کر کے ان کا چہرہ دکھانے کی سر توڑ کوشش کر رہا تھا دیہاتی لہجے میں بات کرنے والی خاتون اپنے گناہ اور جرم کا قصہ نشر ہونے کے خوف سے رونے لگتی ہے۔ نوجوان نقاب پوش لڑکی روتے ہوئے بہادر صحافی کے پاؤں پر گر جاتی ہے۔ بہادر صحافی جو کہ معاشرے کا گند صاف کرنے کا ٹھیکیدار بنا ہوتا ہے فرعونیت سے ان پر گرجنے برسنے لگتا ہے خواتین واویلہ کرتی ہیں۔ منتیں کرتی ہیں۔میرے اندرجیسے کچھ ٹوٹ گیا۔میں نے غور کیا تو میری آنکھوں سے بھی آنسو بہہ رہے تھے۔وہ خواتین گناہگار تھیں۔۔ ان کو گناہ سے روکنے کا شرعی طریقہ بھی موجود تھا۔۔۔لیکن اس طرح کی بے پردگی کبھی میرے رب نے بھی کسی کے گناہ کی نہیں کی۔۔جاری ہے ۔


ساری زندگی بڑے بڑے زمینداروں ، سرمایہ داروں نوابوں فرعونوں کو بڑے بڑے گناہوں اور شرک کے باوجود خزانے بھی عطا کرتا ہے رزق بھی دیتا ہے ان کے عیب بھی ڈھانپتا ہے۔۔۔۔معافی کا اور اپنی طرف لوٹنے کا موقع دیتا جاتا ہے۔۔۔ آخری سانس تک تائب ہونے کی گنجائش دیتا ہے۔اپنے چینل کی ریٹنگ بڑھانے کے چکر میں چوراہوں پر کھڑی بھوک کی ان ننگی تصویروں کو نمایاں کرنے والے بہادر صحافیو آؤ میں تم کو بتاتا ہوں کہاں اس سے زیادہ بڑے گناہ دیکھے جا سکتے ہیں رنگے ہاتھوں زنا کرتے لوگ پکڑے جا سکتے ہیں۔۔جاری ہے ۔


سنو جب میرا رب پردے ڈھانپتا ہے تو تم کون ہو کسی گناہگار کے چہرے کو اور اس کے گناہ کو سرعام کرنے والے؟؟ کیا پتہ کس مجبوری نے اس عورت کو سرعام چوراہے پر بکنے پر مجبور کر دیا؟آؤ میں تم کو بتاتا ہوں ان کو کیسے گناہ سے بچایا جا سکتا ہے۔ چلو ان کے ہاتھ تھام کر ان سے نکاح کر لو میں یقین دلاتا ہوں تمہارا رزق حلال ان کو نیکی کی طرف لے جائے گا۔مومن، مومن کا آئینہ ہوتا ہے۔وہ دوسرے کی غلطی کا احساس ایسے دلاتا ہے، جیسے آئینہ کوئی عیب بتائے ،نہ کہ چوراہوں پر۔ سرِ عام دوسروں کی غلطیاں اچھالنے والے، گناہ اور بغاوت کو ہوا دیتے ہیں۔

کیٹاگری میں : Viral

اپنا تبصرہ بھیجیں