بریکنگ نیوز برما کے مسلمانوں پر ظلم کرنے والی آن سانگ سوچی اللہ کی پکٹر میں آگئی

برما کی آزادی کے ہیرو جنرل آنگ سن کی بیٹی آن سانگ سوچی19 جون 1945ء کو پیدا ہوئی۔ اس کے والد نے برما کی آزادی میں اہم کردار ادا کیا مگر اسے سن انیس سو سینتالیس میں ملک کو اقتدار اعلیٰ کی منتقلی کے دوران قتل کر دیا گیا۔ نوبل انعام پانے والی آن سانگ سوچی کو پوری دنیا میں شہرت اس وقت ملی۔۔۔۔جاری ہے ۔

جب برما میں مسلمانوں پر مظالم کا آغاز ہوا اور یہ موصوفہ شروع میں مجرما نہ طور پر خاموش رہی اور پھر جب اقوام عالم اور خاص طور پر ترکی کی جانب سے شدید رد عمل سامنے آیا تو امن کی اس سو کالڈ فاختہ نے شرمناک حد تکاپنی فوج کو کائونٹر کرتے ہوئےمسلمانوں کی قتل عام کو جائز بلکہ حلال قرار دیدیا ۔۔۔۔۔جاری ہے ۔

اس وقت سرکاری اعداد و شمار کے مطابق کم و بیش 600افراد جاں بحق جبکہ 2لاکھ سے زائد افراد ملک بدر کیے جا چکے ہیں تاہم حقیقت میں یہ اعداد و شمار یکسر غلط ہیں ۔ قارئین کی دلچسپی کے پیش نظر بتاتے چلیں کہ ظلم ہو اور اس ظالم کی پکڑ نہ ہو ؟ ایسا ہو نہیں سکتا ۔ یہ خون آشام درندہ صفت عورت بھی اللہ پاک کی پکڑ میں آچکی ہے ۔ ڈاکٹرز کے مطابق روزانہ کی بنیاد اس کے جسم میں بڑی خوفناک تبدیلیاں ہوناشروع ہو گئی ہیں۔۔۔۔جاری ہے ۔

اور اس کا جسم سکڑتا جا رہا ہے ، تازہ ترین رپورٹس کے مطابق اس کا وزن اب محض 48کلو رہ گیا ہے جو ڈاکٹرز کے مطابق حیران کن حد تک تشویشناک بھی ہے۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول کریں ۔↓↓↓۔

کیٹاگری میں : news