ایک آدمی اپنی بیوی کو ڈنڈے سے مار رہا تھا کہ اچانک

ایک نوجوان اپنی بیوی کو ڈنڈے سے مار رہا تھا کہ ادھر سے ایک دانا بزرگ کا گزر ہوا۔ یہ ماجرا دیکھ کراس بزرگ نے نوجوان سے کہا‘پتر! ڈنڈے سے تو جانوروں کو مارا کرتے ہیں‘۔

 
عورت کو تو عورت سے مارا جاتا ہے‘بزرگ نے یہ بات اتنے درد بھرے لہجے اورشفقت سے کی تھی کہ اس نے سیدھا نوجوان کے دل پر اثر کیا‘ نوجوان نے بزرگ کے احترام میں ڈنڈا زمین پر رکھ دیا‘ بزرگ کی بات غور سے سنی اور کہا: بابا جی میں آپ کی بات کا مطلب نہیں سمجھ پایا‘ بابا جی نے جواب دیا بیٹا عورت پر عورت لا کریعنی سوکن۔عورت نے بابے سے مخاطب ہو کر کہا:

 
چل اوئے بابا، چل، کیتھے ہور جا کے اپنا لُچ تل، یہ ہم دونوں میاں بیوی میں آپس کا معاملہ ہے۔پھر زمین سے ڈنڈا اُٹھا کر اپنے

 
اُٹھا کر اپنے خاوند کو دیتے ہوئے بولی: لیجئے جی‘ آپ اپنا کام شروع کریں اور ادھر ادھر کی باتو ں پر اپنا دھیان نہ دیں۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول  کریں۔ ↓↓↓۔

کیٹاگری میں : Kahani