اگر خواتین اپنے شوہر کی یہ چیر سنگیں تو سائنسدانوں نے خواتین کو سب سے حیران کن بات بتادی

ذہنی تناﺅ اور ڈپریشن ایسے سنگین عارضے ہیں جو کئی خطرناک بیماریوں کا پیش خیمہ ثابت ہوتے ہیں تاہم اب کینیڈین سائنسدانوں نے جدید تحقیق کے بعد خواتین کو ذہنی تناﺅ کم کرنے کا ایسا طریقہ بتا دیا ہے۔جاری ہے ۔

کہ سن کر آپ کی حیرت کی انتہاءنہ رہے گی۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق کینیڈا کی یونیورسٹی آف برٹش کولمبیا کے سائنسدانوں نے بتایا ہے کہ جو خواتین اپنے شوہروں کی شرٹ اور سویٹر وغیرہ سونگھتی ہیں ان کو ذہنی تناﺅ کا سامنا بہت کم کرنا پڑتا ہے۔سائنسدانوں نے اس کی وجہ بیان کرتے ہوئے کہا کہ ”شوہر کی شرٹ اور سویٹر وغیرہ سونگھنے سے خواتین کے جسم میں ذہنی دباﺅ پیدا کرنے والے ہارمونز کی مقدار کم ہوتی ہے۔اگر میاں بیوی ایک دوسرے سے دور ہوں اور بیوی یہ کام کرتی رہے تو اس کے دل میں اپنے شوہر کی محبت جوان رہتی ہے۔ “ اس کے برعکس سائنسدانوں نے اجنبی مردوں کی شرٹس سونگھنے کا نقصان یہ بتایا کہ۔جاری ہے ۔

اس سے ذہنی دباﺅ پیدا کرنے والے ہارمونز کی مقدار بہت زیادہ بڑھ جاتی ہے اور خواتین کو ڈپریشن کا شدید عارضہ لاحق ہونے کے امکانات روشن ہو جاتے ہیں۔تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ فرانسس چن کا کہنا تھا کہ ”یہی وجہ ہے کہ جو خواتین پبلک ٹرانسپورٹ میں زیادہ سفر کرتی ہیں انہیں ذہنی دباﺅ کا زیادہ سامنا کرنا پڑتا ہے۔ یہ بالکل اسی طرح ہوتا ہے جیسے بچہ اپنی ماں کے جسم کی خوشبو سونگھ کر پرسکون ہو جاتا ہے لیکن اجنبیوں کے جسم کی خوشبو اسے بے سکون کر دیتی ہے اور وہ رونے لگتا ہے۔“ واضح رہے کہ یہ اپنی نوعیت کی پہلی تحقیق نہیں ہے۔۔جاری ہے ۔

اس سے قبل بھی سائنسدانوں کی ایک ٹیم چوہوں پر تجربات کے ذریعے ثابت کر چکی ہے کہ مردوخواتین اگر ایک دوسرے کے ملبوسات کو سونگھیں تو وہ پرسکون رہتے ہیں۔

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول  کریں۔ ↓↓↓۔

کیٹاگری میں : news